نگارشات ڈاکٹر محمد حمید اللہ جلد دوم

ڈاکٹر محمد حمید اللہ (پیدائش: 9فروری 1908ء، انتقال: 17 دسمبر 2002ء) ڈاکٹر حمید اللہ ﷫ ایک بلند پایا عالم دین ، مایہ ناز محقق، دانشور اور مصنف تھے  جن کے قلم  سے علوم قرآنیہ ، سیرت نبویہ اور فقہ اسلام پر  195 وقیع کتابیں اور 937 کے قریب مقالات نکلے ۔ڈاکٹر صاحب قانون دان اور اسلامی دانشور تھے اور بین الاقوامی قوانین کے ماہر سمجھے جاتے تھے۔ تاریخ ،حدیث پر اعلٰی تحقیق، فرانسیسی میں ترجمہ قرآن اور مغرب کے قلب میں ترویج اسلام کا اہم فریضہ نبھانے پر آپ کو عالمگیر شہرت ملی۔ آپ جامعہ عثمانیہ سے ایم۔اے، ایل ایل۔بی کی ڈگریاں حاصل کرنے کے  بعد  اعلیٰ تعلیم و تحقیق کے لیے یورپ پہنچے۔ بون یونیورسٹی (جرمنی)  سے ڈی فل اور سوربون یونیورسٹی (پیرس)سے  ڈاکٹریٹ کی  ڈگری  حاصل کی ۔ ڈاکٹر صاحب کچھ عرصے تک جامعہ عثمانیہ حیدر آباد میں پروفیسررہے۔ یورپ جانے کے بعد جرمنی اور فرانس کی یونیورسٹیوں میں بھی تدریسی خدمات انجام دیں۔ فرانس کے نیشنل سنٹر آف سائینٹیفک ریسرچ سے تقریباً بیس سال تک وابستہ رہے۔ علاوہ ازیں یورپ اور ایشیا کی کئی یونیورسٹیوں میں آپ کے توسیعی خطبات کا سلسلہ بھی جاری رہا۔ڈاکٹر مرحوم  نے اپنی پوری زندگی تصنیف وتالیف کے کاموں کے لیے وقف کیے رکھی بالآخر 95 برس کی عمر پاکر  17؍دسمبر 2002ء کو فلوریڈا (امریکہ) میں  اپنے خالق حقیقی سے جاملے ۔ان کے سانحۂ ارتحال کے بعد اہل  دانش  نے ان کی خدمت میں گلہائے عقیدت نچھاور کیے اور موصوف کی زندگی  کی مختلف جہتوں پر اپنی اپنی بساط کےمطابق داد تحقیقی دی ۔ بعض علمی اداروں  کی طرف سے  ان کی خدمات کےاعتراف میں  رسائل وجرائد کے خاص نمبر بھی شائع کیے ۔ اللہ تعالیٰ مرحوم  کو جوارِ رحمت میں جگہ دے ۔آمین زیر نظر کتاب ’’ نگارشاتِ  ڈاکٹر محمد حمید اللہ ‘‘ محمد عالم  مختارِ حق  کی مرتب شدہ  ہیں  مرتب موصوف نے  ڈاکٹر حمید اللہ مرحوم کےمضامین ومقالات کو  موضوعات کے   حساب سے مرتب کر کے  دو دجلد میں  تقسیم کیا ہے موضوعاتی عناوین حسب ذیل ہیں۔قرآن،سیرت،فقہ،اکابرین، تاریخ، قانون، خطۂ عرب، مستشرقین، ادب، سود وغیرہ۔۔

 

عناوین صفحہ نمبر
قرآن
قرآن مجید منزل بہ منزل 13
قرآن مجید کے ترجمے 94
زبان اور اللہ کا کلام 110
سیرت
ہجرت 123
عہد نبوی کا نظام تعلیم 138
اطلبو العلم ولو بالصین 159
اکابرین
حضرت علی بن ابی طالب 165
مفتی محمد شفیع عثمانی 206
مولوی عبد الحق کی یاد میں 210
تاریخ
اسلامی فلاحی ریاست کا قیام 217
شہری مملکت مکہ 228
اسلامی عدل گستری اپنے آغاز میں 271
مرکزی سیاست اور قانون شخصی 300
تالیف قلبی 305
تصادم قوانین کا اسلامی تصور اور عمل 311
سہر سویز کا پرواجیکٹ حضرت عمرؓ کے زمانے میں 333
جاہلیت عرب کے معاشی نظام کا اثر 338
عربی حبشی تعلقات اور مکاتبیب نبویﷺ 356
دنیا کا سب سے پہلا تحریری دستور 382
اولین مساجد 406
الاخبار الطوال ازدنیوری 413
تقویم ہجری اور مسلمانوں میں ایک دن عید منانے کا مسئلہ 494
خود نوشت
پچیس سال پہلے کی باتیں 505
میری علمی اور مطالعاتی زندگی 510
مکاتیب 515
You might also like
Comments
Loading...